Home » دنیا کا سب سے سستا ترین ریفریجریٹر !!
معلومات

دنیا کا سب سے سستا ترین ریفریجریٹر !!

١٩٩٠ میں نائجیریا کے ایک معلم “بھا محمد ابا” نے اللہ کی مخلوق کو آسانیاں فراہم کرنے کی کوشش میں ہزاروں سال پرانا ایک ایسا حیرت انگیز کم خرچ ریفریجریٹر دوبارہ سے تیار کر لیا کہ جس سے پھل اور سبزیاں, پندرہ سے بیس دن تک بغیر بجلی کے محفوظ رکھ سکتے ہیں۔۔۔ بھا محمد ابا نے اپنے ذاتی وسائل سے پانچ ہزار ایسے ریفریجریٹر بنا کر مفت تقسیم کئے جنہیں “زیر پوٹ” کہا جاتا ہے۔۔۔ ٢٠٠١ میں ان کی اس شاندار دریافت کو ایک لاکھ ڈالر کے “رولیکس ایوارڈ”

سے نوازا گیا۔۔۔ اب تک افریقہ اور دنیا کے بہت سے ممالک میں لاکھوں زیر پوٹ ریفریجریٹر تیار کئے جا چکے ہیں۔۔۔آپ بھی بآسانی اپنے لئیے اورگینک ریفریجریٹر گھر میں بنا سکتے ہیں۔۔۔ اس کے لئیے درج ذیل سامان درکار ہے۔۔۔۔دو مٹی کے گملے اور کچھ ریت کاٹن یا جوٹ کا کپڑا , گملوں میں ایک کا سائز بڑا ہو گا دوسرا اس سے دو انچ چھوٹا۔۔۔ (مثلاً بڑا گملا اٹھارہ انچ گول اور اٹھارہ انچ اونچا ہے تو دوسرا سولہ انچ گول، سولہ انچ اونچا ہوگا سائز کوئی بھی لیا جا سکتا ہے)۔۔۔

بڑے سائز کے گملے میں نیچے دو انچ ریت بچھا دیں اور اس کے اوپر چھوٹا گملا رکھ دیں۔۔۔ اطراف کی خالی جگہ میں بھی ریت بھر دیں اور اس ریت میں پانی ڈال کر اتنا گیلا کر لیں کہ پانی باہر نہ بہہ جائے۔۔۔۔ اوپر کوئی کاٹن کا، جوٹ کا کپڑا جس کی بوری بنتی ہے گیلا کر کے ڈال دیں۔۔۔ لیں جناب , دنیا کا سب سے سستا ریفریجریٹر تیار ہے۔۔۔ جس کی لاگت بمشکل تین سو روپے آئے گی اور اب اس میں سبزیاں، پھل، پانی کی بوتل، رکھ کر گیلا کپڑے سے ڈھک کر کسی کھلی ہوا دار جگہ رکھ دیں۔۔۔ ہر روز گملے کے اطراف والی ریت اور اوپر ڈالے کپڑے کو گیلا کرنا ہو گا۔۔۔ایسے ریفریجریٹر بنا کر خود بھی استعمال کریں اور ہو سکے تو ضرورت مندوں کو تقسیم بھی کیجئے۔۔۔۔۔!!!

Add Comment

Click here to post a comment